مقبول اداکارہ زیبا بیگم طبیعت بگڑنے پر ہسپتال منتقل

ان کے داماد شاہد نے بتایا کہ زیبا بیگم کو ایمبولینس کے ذریعے روانہ کیا گیا اور اب ان کی حالت خطرے سے باہر ہے۔

0 12

Get real time updates directly on you device, subscribe now.

ماضی کی معروف پاکستانی اداکارہ زیبا بیگم کو طبیعت بگڑنے پر راولپنڈی کے ملٹری ہسپتال منتقل کیا گیا ہے۔

گزشتہ روز طبیعت ناساز ہونے کے باعث زیبا بیگم کو تشویشناک حالت میں لاہور کے نجی ہسپتال لے جایا گیا تھا جس کے بعد انہیں راولپنڈی کے ملٹری ہسپتال منتقل کیا گیا۔

زیبا بیگم کے خاندانی ذرائع کے مطابق انہیں ہسپتال کے انتہائی نگہداشت وارڈ (آئی سی یو) میں داخل کیا گیا۔

PAKasia

ان کے داماد شاہد نے بتایا کہ زیبا بیگم کو ایمبولینس کے ذریعے روانہ کیا گیا اور اب ان کی حالت خطرے سے باہر ہے۔

زیبا بیگم کے داماد نے بتایا کہ ڈاکٹر نے انہیں ہوائی جہاز کے سفر سے منع کیا ہے اس لیے انہیں بائے روڈ راولپنڈی منتقل کیا گیا۔

ان کے مطابق زیبا بیگم کو دل کا عارضہ لاحق ہے، جس کا علاج راولپنڈی یا کراچی میں ہی ممکن ہے۔

زیبا بیگم کے داماد نے درخواست کی کہ تمام پرستار ان کی صحتیبابی کے لیے دعا کریں۔

PAKasia

لولی وڈ کی مقبول اداکارہ زیبا بیگم کا اصل نام شاہین بانو ہے لیکن انہوں نے زیبا بیگم کے نام سے شہرت پائی۔

انہوں نے اداکار محمد علی سے شادی کی تھی اور وہ دونوں ایک ساتھ کئی ہٹ فلموں میں بھی ساتھ نظر آئے جن میں ‘انسان اور آدمی’، ‘انصاف اور قانون’ اور ‘تم ملے پیار ملے’ جیسی فلمیں بھی شامل ہیں۔

زیبا بیگم نے 1962 میں فلم ‘چراٖغ جلتا رہا’ سے ڈیبیو کیا اور ان کا فلمی کیریئر تقریباً 3 دہائیوں پر مشتمل ہے، انہوں نے تقریباً 94 فلموں میں اداکاری کی۔PAKasia

انہوں نے 3 مرتبہ نگار ایوارڈ حاصل کیا اور 1999 میں ملینیئم ایوارڈ بھی حاصل کیا۔

زیبا بیگم کی آخری فلم ‘محبت ہو تو ایسی’ 1989 میں ریلیز ہوئی تھی اور اس میں بھی انہوں نے اداکار محمد علی کے ساتھ اداکاری کی تھی۔

حکومت پاکستان کی جانب سے 2016 میں اداکارہ زیبا بیگم کو ہلالِ امتیاز سے بھی نوازا گیا تھا۔

Get real time updates directly on you device, subscribe now.

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More

Privacy & Cookies Policy