خیرپورناتھن شاہ: نواحی گاؤں گلزار تھیبو کی خواتین، بچوں اور مردوں کا سیتا لِنک روڈ پر احتجاجی مظاہرہ

متاثر ہ عورت سوھنی نے ائے جی سندھ ، ڈی آئی جی حیدرآباد اور اعلیٰ حکام سے مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ مجھے اصغر سے تحفظ دیا جائے اگر مجھے اور میرے بچوں کو کجھ بھی ہوا تو اس کا ذمہ دار میرا سابق شوہر اصغر ہوگا۔

0

خیر پور ناتھن شاہ (رجب علی کھوڑو، میڈیا رپورٹر) ― نواحی گاؤں گلزار تھیبو کے مکین خواتین بچوں اور مردوں نے قرآن پاک ہاتھ میں لے کر سیتا لنک روڈ پر احتجاجی مظاہرہ اور دھرنادیا۔

دورانِ احتجاج مظاہرین نے ہاتھ میں قرآن پاک لیکر مسمات سوھنی کھوسہ اور دیگر کے ہمراہ پاک ایشیاء ویب ٹی وی چینل کو روتے ہوئے بتایا کہ اُس نے اصغر اگرو سے ڈیڑہ سال قبل خیرپورناتھن شاہ کی فیملی کورٹ سے طلاق لی ہے اور اب میرا سابق شوہر. اصغر میری جان کا دشمن بن گیا ہے۔

متاثر ہ خاتون نے مزید کہا کہ میرئے سابق شوہر اصغر اس کے ساتھ گلن اگرو ،نظیر اگرو بااثر ہیں اوراے ایس آئے گل محمد لنڈ سے مل کر میرے عزیز وں کے اوپر جھوٹا مقدمہ درج کروا رہے ہیں اور ہمیں بلیک میل کر کے خوف زدہ کررہے ہیں اور ہمیں جان سے مارنے کی دھمکیاں بھی دے رہے ہیں۔

مسمات سوھنی کھوسہ نے مزید کہا کہ میرا سابق شوہر جھوٹ بول رہا ہے کہ میں اور میرے بچے وڈیرے کے پاس قید ہیں۔ یہ سراسر جھوٹ ہے کیونکہ میرے بچے ،میرے والدین کے پاس خوش ہیں۔ میرا سابق شوہر بدمعاش افراد سے مل کر میرے والدین کے گھر پر حملہ کرکے ہمیں اغوا اور جان کا نقصان پہنچا سکتا ہےجبکہ فیملی کورٹ نے فیصلہ دیا ہے کہ میرے تین بچوں کو وہ ہر ماہ 18ہزار خرچہ دئے گالیکن ڈیڑھ سال سے اس نے ایک روپیہ تک نہیں دیا۔

متاثر ہ عورت سوھنی نے ائے جی سندھ ، ڈی آئی جی حیدرآباد اور اعلیٰ حکام سے مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ مجھے اصغر سے تحفظ دیا جائے اگر مجھے اور میرے بچوں کو کجھ بھی ہوا تو اس کا ذمہ دار میرا سابق شوہر اصغر ہوگا۔

مزید تفصیلات دیکھیں پاک ایشیا کے میڈیا رپورٹر رجب علی کھوڑو کی اس رپورٹ میں:

تبصرے