خیر پور ناتھن شاہ: لائسنس کی تجدید میں تاخیر پر مچھیروں کا 1 ماہ سے مسلسل احتجاجی دھرنا

اسی صورت حال کے پیش نظر تقریباً ایک ماہ اور دو دن سے مچھیروں نے اپنے مطالبات منوانے کے لیے مسلسل احتجاجی دھرنا دیا ہوا ہے۔ دوسری جانب ضلعی اور تعلقہ انتظامیہ گہری نیند سوئی ہوئی ہے۔

5

خیر پور ناتھن شاہ (رجب علی کھوھارو، میڈیا رپورٹر) ― مچھلی کے لائسنس کی تجدیا نا ہونے اور وڈیروں کے ظلم و زیادتی کے خلاف مچھیروں نے جھیل پر پچھلے 1 ماہ سے مسلسل احتجاج اور دھرنا دیا ہوا ہے۔

پاک ایشیا ویب ٹی وی چینل کو موصول ہونے والی اطلاعات کے مطابق جھیل پر بااثر افراد نے پولیس اور انتظامیہ کی ملی بھگت کے ساتھ قبضہ کر کے مچھیروں کو اُن کے روزگار سے محروم کر رکھا ہے۔ خصوصاً مچھیروں کو مچھلی کا شکار کرنے کے لیے جس لائسنس کی ضرورت ہوتی ہے متعلقہ انتظامیہ اس کی تجدید میں ٹال مٹول سے کام لے کر مچھیروں کا معاشی قتل کر رہی ہے۔

اسی صورت حال کے پیش نظر تقریباً ایک ماہ اور دو دن سے مچھیروں نے اپنے مطالبات منوانے کے لیے مسلسل احتجاجی دھرنا دیا ہوا ہے۔ دوسری جانب ضلعی اور تعلقہ انتظامیہ گہری نیند سوئی ہوئی ہے۔

پاک ایشیا ویب ٹی وی چینل کے نمائندہ نے دھرنا میں شریک افراد سے بات کرتے ہوئے بتایا کہ مظاہرین کا مطالبہ ہے کہ جھیل پر سے قبضہ ختم کروا کر وہاں پر موجود پولیس ایکٹ ہٹایا جائے اور لائسنس کی تجدید کی جائے تاکہ غریب مچھیروں کی روزی روٹی کا سلسلہ جاری رہے۔ مظایرن کا مزید کہنا تھا کہ جب تک ہمارے مطالبات منظور نہیں ہوتے تب تک ہمارا یہ دھرنا جاری رہے گا۔

مزید تفصیلات دیکھیں پاک ایشیا کے میڈیا رپورٹر "رجب علی کھوھارو” کی اس رپورٹ میں:

تبصرے