کندیاں: "امجد علی خان” نے خصوصی گرانٹ سے بجلی کی مختلف سکیموں کا افتتاح کر دیا

پاک ایشیاء ویب ٹی وی چینل کے میڈیا رپورٹر "عطاء محمد شاہ" کی خبر کے مطابق اس موقع پر امجد علی خان نے کہا کہ کندیاں کی سرزمین میری ماں جیسی ہے، یہاں کی مٹی سے مجھے بے حد پیار ملا ھے اور میں اھلیانِ کندیاں کی محبتوں کو کبھی فراموش نہیں کر سکتا۔

0 5

Get real time updates directly on you device, subscribe now.

کندیاں (عطاء محمد شاہ، میڈیا رپورٹر) ― چیئرمین قائمہ کمیٹی برائے دفاع اور ممبر قومی اسمبلی امجد علی خان نے اپنی خصوصی گرانٹ سے وانڈھا لنگرے خیل کندیاں میں بجلی کی مختلف سکیموں کا افتتاح کر دیا ہے۔

پاک ایشیاء ویب ٹی وی چینل کے میڈیا رپورٹر "عطاء محمد شاہ” کی خبر کے مطابق اس موقع پر امجد علی خان نے کہا کہ کندیاں کی سرزمین میری ماں جیسی ہے، یہاں کی مٹی سے مجھے بے حد پیار ملا ھے اور میں اھلیانِ کندیاں کی محبتوں کو کبھی فراموش نہیں کر سکتا۔

انہوں نے کہا کہ کندیاں کو ماڈل شہر بنانے کے لیے تمام تر ممکنہ وسائل بروئے کار لائے جار ہے ہیں۔ اکا کہنا تھا کہ ضلع میانوالی کو جدید تعلیمی تقاضوں سے آراستہ کرنے لیے وزیر اعظم عمران نے میری درخواست پر 5 ارب کے فنڈز مختص کیے ھیں اور اِن شاء اللہ! میانوالی میں تعلیمی انقلاب برپا ھو گا۔

امجد علی خان کا کہنا تھا کہ قبائلی دشمنیوں نے ہمارے ضلع کے تشخص کو داغ دار کردیا ہے۔ قبائلی دشمنیوں کو ختم کرنے کے لیے ضلع کے باشعور عوام کو اپنا بھرپور کردار ادا کرنا چاھیے تاکہ میانوالی امن کا گہوارہ بن سکے۔

پاک ایشیاء ویب ٹی وی چینل کے نمائندہ سے اظہار خیال کے دوران اُن کا کہنا تھا کہ اِن شاء اللہ! فرزندِ میانوالی وزیراعظم عمران خان کی قیادت میں نہ صرف میانوالی ایک ماڈل ضلع بنے گا بلکہ پورا ملک ترقی اور خوش حالی کی راہ پر گامزن ہو گا۔ عمران خان ایک ایمان دار اور محب وطن لیڈر ہیں، اُن کی ذات پر بدعنوانی کا کوئی داغ نہیں۔

تقریب سے ملک فاروق جوڑا، پروفیسر ملک خضر حیات کندی، ملک ظہیر کندی، مظہر خان، امیر عبد اللہ کندی و دیگر نے بھی خطاب کیا۔

مزید تفصیلات دیکھیں پاک ایشیا کے میڈیا رپورٹر "عطاء محمد شاہ” کی اس رپورٹ میں:

Get real time updates directly on you device, subscribe now.

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More

Privacy & Cookies Policy