یونیسیف نے 220 آکسیجن کنسینٹریٹر پاکستان کے حوالے کردیے

حوالگی کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے ڈائریکٹر جنرل ہیلتھ ڈاکٹر رانا محمد صفدر نے اے ڈی بی، یونیسف اور دیگر تمام اسٹیک ہولڈرز کا شکریہ ادا کیا جو ملک میں وبائی امراض پھیلنے کے بعد سے حکومت کی مدد کر رہے ہیں۔

0 10

Get real time updates directly on you device, subscribe now.

اسلام آباد: اقوام متحدہ کے انٹرنیشنل چلڈرنز ایمرجنسی فنڈ (یونیسیف) نے کورونا وائرس، پیدائش کے وقت دم گھٹنے اور پیچیدہ نمونیا میں مبتلا مریضوں کے علاج کے لیے 220 آکسیجن کنسینٹریٹر وزارت قومی صحت سروسز کو سونپ دی۔

پاک ا یشیا  کے مطابق یونیسیف نے اعلان کیا کہ 3 لاکھ 31 ہزار ڈالر کے ایشین ڈویلپمنٹ بینک کی مالی اعانت سے زندگی بچانے والی ڈیوائس آکسیجن کنسنٹریٹر کو صحت عامہ کی سہولیات میں نصب کرنے کے لیے وفاقی دارالحکومت سمیت ملک کے 7 بڑے شہروں میں بھیج دیا گیا ہے۔

حوالگی کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے ڈائریکٹر جنرل ہیلتھ ڈاکٹر رانا محمد صفدر نے اے ڈی بی، یونیسف اور دیگر تمام اسٹیک ہولڈرز کا شکریہ ادا کیا جو ملک میں وبائی امراض پھیلنے کے بعد سے حکومت کی مدد کر رہے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ ہم آکسیجن کنسنٹریٹر جیسے وسائل کو استعمال کرنا چاہتے ہیں جسے کووڈ 19 سے متاثرہ لوگوں کے علاج کے لیے اے ڈی بی اور یونیسف نے بہترین ممکنہ انداز میں فراہم کیا ہے، یہ انمول ہے اور اس سے ہمیں سنگین علامتوں والے مریضوں کو زیادہ موثر انداز میں دیکھ بھال کرنے کی صلاحیت حاصل ہوگی۔

ابتدائی طور پر ،000 500،000 کی گرانٹ کے علاوہ جو ذاتی حفاظتی سازوسامان (پی پی ای) اور آکسیجن حراستی حاصل کرنے کے لئے استعمال کی گئی ہے ، اے ڈی بی نے پاکستان کو کوڈ 19 وبائی امراض سے نمٹنے کے لئے اپنی کوششوں کو مستحکم کرنے میں مزید 20 لاکھ ڈالر کی فراہمی بھی کی ہے۔

5 لاکھ ڈالر کی ابتدائی گرانٹ جس کو ذاتی حفاظتی سازوسامان (پی پی ای) اور آکسیجن کنسنٹریٹر کی خریداری کے لیے استعمال کیا گیا، کے علاوہ اے ڈی بی نے پاکستان کو کووڈ 19 وبائی مرض سے نمٹنے کے لیے اپنی کوششوں کو مستحکم کرنے کے لیے مزید 20 لاکھ ڈالرز بھی فراہم کیا ہے۔

یہ فنڈز وبائی مرض سے متاثرہ برادری کے لیے زندگی بچانے والی طبی اشیا، تشخیصی اور لیبارٹری کی سہولیات اور دیگر اہم سازوسامان کے حصول کے لیے استعمال ہوں گے۔

اے ڈی بی کے کنٹری ڈائریکٹر ژیاؤ ہونگ یانگ نے کہا کہ ‘کووڈ 19 کے پھیلنے کے بعد سے اے ڈی بی نے چیلنج پر رد عمل دینے میں عوام اور حکومت پاکستان کی حمایت کرنے کے لیے آگے بڑھا ہے’۔

پاکستان میں کووڈ 19 کے پھیلاؤ کے بعد سے اے ڈی بی اور یونیسف ملک میں کورونا وائرس کے پھیلاؤ کو روکنے کے لیے پی پی ای اور دیگر طبی سامان کی خریداری میں فنڈز اور تکنیکی مدد فراہم کرنے میں تعاون کر رہے ہیں۔

Get real time updates directly on you device, subscribe now.

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More

Privacy & Cookies Policy