fbpx
پاکستان کرکٹ

190 رنز پر شاہینوں کے پر کٹ گئے ، جنوبی افریقہ کو 149 رنز کا ہدف

 پاکستان ٹیم دوسری اننگز میں 190 رنز بنا کر آؤٹ ہو گئی۔ امام الحق اور شان مسعود نے نصف سنچریاں سکور کیں۔ جنوبی افریقہ کو 149 رنز کا ہدف ملا، فاسٹ باؤلر اولیور نے میچ میں گیارہ شکار کئے۔

پاکستان اور جنوبی افریقہ کے درمیان سنچورین میں جاری پہلے ٹیسٹ میچ کے دوسرے روز پاکستان کی پوری ٹیم 190 رنز بنا کر آؤٹ ہو گئی ہے۔

اس طرح پاکستان نے جنوبی افریقہ کو یہ ٹیسٹ میچ جیتنے کے لیے 149 رنز کا ہدف دیا ہے۔ پاکستان کی دوسری اننگز کے خاتمے پر دوسرے دن کے کھیل کا بھی اختتام ہوا۔

پاکستان کی جانب سے دوسری اننگز میں سوائے امام الحق اور شان مسعود کے کوئی بھی بلے باز لمبی اننگز کھیلنے میں کامیاب نہ ہو سکا، دونوں کھلاڑیوں نے سینچریاں سکور کیں۔ امام الحق نے 57 جبکہ شان مسعود نے 65 رنز کی اننگز کھیلی لیکن ٹیم کا کوئی اور کھلاڑی خاطر خواہ کارکردگی دینے میں ناکام رہا جس کی وجہ سے پاکستان جنوبی افریقہ کو جیت کا بڑا ہدف نی دے سکا۔

جنوبی افریقہ کی جانب سے اولیوئر کامیاب باؤلر اولیوئر رہے جنہوں نے دوسری اننگز میں پانچ وکٹیں حاصل کیں۔ اس طرح انھوں نے میچ میں کل 11 وکٹیں حاصل کیں۔

دوسری اننگز میں پہلے آؤٹ ہونے والے کھلاڑی فخر زمان تھے جو جارحانہ شاٹ کھیلتے ہوئے 12 رنز پر کیچ آؤٹ ہوئے۔ پاکستان کو دوسرا نقصان امام الحق کی صورت میں اٹھانا پرا جو 57 رنز بنا سکے۔ تیسرے آؤٹ ہونے والے بلے باز اظہر علی تھے جو صفر پر کیچ آؤٹ ہوئے۔

آؤٹ ہونے والے چوتھے بلے باز اسد شفیق تھے جو صرف چھ رنز ہی بنا سکے۔ بابر اعظم دوسری اننگز میں ناکام رہے ہیں اور چھ رنز ہی بنا پائے۔ کپتان سرفراز احمد ایک بار پھر غیر ضروری شاٹ کھیلتے ہوئے کوئی بغیر کوئی رن بنائے کیچ دے بیٹھے۔ اس کے بعد محمد عامر 12 اور یاسر شاہ صفر پر آؤٹ ہوئے۔

سنچورین ٹیسٹ میں جنوبی افریقہ نے آج 127 رنز پانچ کھلاڑی آؤٹ سے اپنی پہلی نامکمل اننگز کا آغاز کیا۔ میزبان ٹیم کے ٹیمبا باووما 38 اور ڈیل سٹین نے 13 رنز سے بیٹنگ شروع کی تاہم 60 ویں‌ اوور تک شاہینوں‌ نے ساری ٹیم کو پویلین بھجوا دیا۔

پاکستان اور جنوبی افریقہ کے مابین سنچورین ٹیسٹ کے دوسرے روز میزبان ٹیم نے جب اننگز کا آغاز کیا ان کے 127 رنز 5 کھلاڑی آؤٹ تھے تاہم محمد عامر نے ڈیل سٹین کو جلد ہی واپسی کی راہ دکھا دی، انھوں نے 23 رنز بنائے۔ ٹیما باووما نے بہتر کارکردگی کا مظاہرہ کرتے ہوئے 53 رنز بنائے۔ ان کا شاہین آفریدی کی بال پر سرفراز نے کیچ کر لیا۔

ان کے بعد کیشو مہاراج صرف 4 رنز بنا سکے جبکہ ربادا، شاہین شاہ آفریدی کی بال پر اسد شفیق کے ہاتھوں کیچ آوٹ ہو گئے، انھوں نے 19 رنز کا اضافہ کیا۔ کے ڈی کوک نے بھی بہتر کارکردگی کا مظاہرہ کرتے ہوئے 45 رنز بنائے۔ پاکستانی بولرز نے آج بھی بہتر کارکردگی کا مظاہرہ کرتے ہوئے تمام بلے بازوں کو 223 کے مجموعی سکور پر پوپیلین کی راہ دکھا دی یوں میزبان ٹیم کو پاکستان پر 42 رنز کی برتری حاصل ہو گئی ہے۔

گذشتہ روز بھی میدان میں باؤلرز کا راج رہا، گراسی پچ پر سوئنگ اور سپیڈ کا خوب جادو چلا، پندرہ وکٹیں گریں۔ پہلے مہمان پاکستان کی ٹیم ایک سو اکاسی رنز پر ڈھیر ہو گئی۔ بابر اعظم اکہتر رنز کے ساتھ نمایاں رہے جبکہ کپتان سرفراز سمیت چھ کھلاڑی ڈبل فگر میں نہ جا سکے۔

جواب میں میزبان پروٹیز کو بھی باؤلرز نے تگنی کا ناچ نچایا، انیس رنز کا آغاز مل سکا۔ ہاشم آملہ جیسے خطرناک بلے باز کی ٹھاٹھ باٹھ صرف آٹھ رنز پر ختم ہو گئی۔ محمد عامر اور شاہین شاہ آفریدی نے دو دو وکٹیں گرائیں، حسن علی نے ایک بیٹسمین کو چلتا کیا تھا۔


پاک ایشیاء ایک غیر منافع بخش ادارہ ہے۔ ہماری صحافت کو سرکاری اور کارپوریٹ دباؤ سے آزاد رکھنے کے لیے مالی تعاون کیجیے نیز اس خبر کے حوالے سے اپنی آراء کا اظہار کمنٹس میں کریں اور شیئر کر کے ہماری حوصلہ افزائی کریں

About the author

عدیل رحمان (معاون مُدیر)

عدیل رحمان پاک ایشیاء میں بطور معاون مُدیر کے طور پر اپنی خدمات ادا کر رہے ہیں- یہ پاک ایشیاء کے ابتدائی ساتھیوں میں سے ایک ہیں اور انتہائی جانفشانی سے کام کرتے ہیں اللہ تعالیٰ نے انہیں منفرد تخلیقی صلاحیتوں سے نوازا ہے جس کا اظہار اکثر اُن کی خبروں کی سُرخیوں سے بھی لگایا جا سکتا ہے۔

Add Comment

Click here to post a comment

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.