حکومتی دعوے دھرے رہ گئے، عوام چینی 110 روپے کلو خریدنے پر مجبور

عوام کا  شکوہ ہے کہ تذلیل نہ کی جائے اور  دکانوں پرچینی کی دستیابی ممکن بنائی جائے

0 16

Get real time updates directly on you device, subscribe now.

لاہور : حکومتی دعوؤں کے باوجود  بازار میں چینی عام آدمی کو مقررہ نرخوں پر دستیاب نہیں ہے اور یہی وجہ ہے کہ سستی چینی کے لیے بازاروں میں رش بڑھ گیا ہے۔ 

ک ایشیا ویب چینل کے مطابق لاہور کے بازاروں میں چینی غائب ہو گئی اور  بڑی مشکل سے  آدھا کلو چینی 85 روپے کلو کے حساب سے  مل رہی ہے جب کہ عام اسٹوروں پر چینی 110 روپے کلو فروخت کی جارہی ہے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ 65 روپے کلو سستی چینی خریدنے کے لیے رمضان بازاروں میں قطاریں بدستور لگی ہوئی ہیں جہاں خریدار کی  انگلی پر نشان لگا کر چینی فروخت کی جارہی ہے۔

پاک ایشیا ویب چینل سے گفتگو کرتی عوام کا  شکوہ ہے کہ تذلیل نہ کی جائے اور  دکانوں پرچینی کی دستیابی ممکن بنائی جائے۔

دوسری جانب  ڈپٹی کمشنر لاہور کا کہنا ہے کہ دکانوں پر 85 روپے کلو چینی کی دستیابی ممکن بنا رہے ہیں۔

خیال رہے کہ پنجاب حکومت کی تمام تر کوششوں کے باوجود چینی کی مقرر کردہ نرخوں پر عوام کو دستیابی ممکن نہیں ہو سکی ہے  جب کہ ڈیلرز اور شوگر ملز مالکان کے عدم تعاون سے چینی کا بحران کم ہونے کا نام نہیں لے رہا۔

Get real time updates directly on you device, subscribe now.

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More

Privacy & Cookies Policy