fbpx
پاکستان سیاست

آصف زرداری،فریال تالپور کی ایف آئی اے میں پیشی

پاکستان پیپلز پارٹی  کے شریک چیئرمین اور سابق صدر آصف علی زرداری اور ان کی ہمشیرہ فریال تالپور جعلی اکاؤنٹس سے متعلق منی لانڈرنگ کیس میں ایف آئی اے کے سامنے پیش ہوگئے۔

جعلی اکاؤنٹس کیس میں ایف آئی اے کی جانب سے مسلسل چوتھی مرتبہ طلب کیے جانے پر سابق صدر اور ان کی ہمشیرہ زونل آفس میں مشترکہ تحقیقاتی ٹیم (جے آئی ٹی) کے سامنے پیش ہوئے، اس موقع پر پولیس اور ایف آئی اے ٹیم نے عمارت کو حصار میں لیا ہوا تھا۔

زونل آفس میں آصف زرداری اور فریال تالپور کی پیشی کے موقع پر ان کے ہمراہ سابق وزیر اعظم یوسف رضا گیلانی، راجا پرویز اشرف، فرحت اللہ بابر، قمر زمان کائرہ، روبینہ قائم خانی اور شیری رحمٰن بھی موجود تھیں۔

ایف آئی اے میں پیشی کے موقع پر تحقیقاتی ٹیم نے سابق صدر اور ان کی ہمشیرہ سے جعلی اکاؤنٹس اور رقم کی ٹرانزیکشن کے حوالے سے سوالات کیے۔

بعد ازاں سابق صدر نے میڈیا سے غیر رسمی گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ بدقسمتی سے یہ کیس سابق وزیر اعظم نواز شریف کے دور میں بنایا گیا تھا۔

انہوں نے کہا کہ وفاقی تحقیقاتی ادارہ جو چاہے سوالات اٹھائے لیکن اصل بات یہ ہے کہ ‘حقائق کیا ہیں’۔

اس موقع پر ایک صحافی کی جانب سے آصف علی زرداری سے سوال کیا گیا کہ کیا آپ کو دباؤ میں لانے کے لیے اس طرح کے کیسز بنائے گئے ہیں؟ تو سابق صدر نے مسکراتے ہوئے کہا کہ یہ بات کس نے کہی ہے؟


اس خبر کے حوالے سے اپنی آراء کا اظہار کمنٹس میں کریں




From Google