fbpx
پاکستان رپورٹرز نیوز

جامعہ سندھ کی جانب سے موہن جو دڑو سمیت دریاہ کنارے واقع قدیمی مقامات و انسانی آبادی کے تحفظ کے لیے عالمی کانفرنس نومبر کو طلب کرنے کا فیصلہ

( عرفان مری 1388-PAk-Tv-2019 )
جامشورو : جامعہ سندھ ٹھٹھہ کیمپس کے انٹرنیشنل سینٹر فار انڈس ویلی انٹیگریٹڈ اسٹڈیز کے زیر اہتمام نومبر میں ”واٹر اینڈ سیٹلمنٹ: ہسٹری آف سولائیزیشن“ کے عنوان پر عالمی کانفرنس بلانے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ کانفرنس کا مقصد سندھو دریاہ کے کنارے پر انسانی آبادیوں اور قدیمی مقامات کو محفوظ بنانے کے سلسلے میں موثر حکمت عملی مرتب کرنی ہے۔ اس سلسلے میں شیخ الجامعہ سندھ پروفیسر ڈاکٹر فتح محمد برفت کی زیر صدارت ایک اہم اجلاس ہوا، جس میں ریکٹر جرمنی یونیورسٹی عمان و آرکیالاجی ماہر ڈاکٹر مائیکل جانسن، فوکل پرسن جامعہ سندھ ٹھٹھہ کئمپس پروفیسر ڈاکٹر سرفراز حسین سولنگی، ڈاکٹر رفیق لاشاری، ڈاکٹر سمیرا عمرانی، داکٹر اسحاق سمیجو، عمران سانڈانو و دیگر نے شرکت کی۔ اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ ”واٹر اینڈ سیٹلمنٹ: ہسٹری آف سولائیزیشن“ کے عنوان سے اہم عالمی کانفرنس نومبر کے پہلے ہفتے میں منعقد کی جائیگی، جس میں جرمنی، فرانس، امریکا، کینیڈا، برطانیہ و چین سمیت پوری دنیا سے آرکیالاجسٹ، اینتھرو پالاجسٹ، ارضیائی ماہر، پانی اور سیٹلمنٹ میں مہارت رکنے والے و دیگر سائنسدانوں کو شرکت کی دعوت دی جائیگی۔ کانفرنس کی تیاری کے لیے ایک آرگنائیزنگ کمیٹی قائم کی گئی، جس کے کنوینر جرمنی یونیورسٹی عمان کے ریکٹر، قدیمی آثاروں کے ماہر و موہن جو دڑو پر کام کرنے والے پروفیسر ڈاکٹر مائیکل جانسن ہونگے، جبکہ سیکریٹری ڈاکٹر سرفراز حسین سولنگی ہونگے


About the author

عدیل رحمان (معاون مُدیر)

عدیل رحمان پاک ایشیاء میں بطور معاون مُدیر کے طور پر اپنی خدمات ادا کر رہے ہیں- یہ پاک ایشیاء کے ابتدائی ساتھیوں میں سے ایک ہیں اور انتہائی جانفشانی سے کام کرتے ہیں اللہ تعالیٰ نے انہیں منفرد تخلیقی صلاحیتوں سے نوازا ہے جس کا اظہار اکثر اُن کی خبروں کی سُرخیوں سے بھی لگایا جا سکتا ہے۔

Add Comment

Click here to post a comment

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.




From Google

WordPress Video Lightbox Plugin