پاکستان کرائم سٹوری

محنت کش کا بیٹا چوری کے الزام میں قتل

 نجی اسپتال میں دو ڈاکٹر بھائیوں نے چوری کے الزام میں حجام کے بیٹے محمد آصف کو لاٹھیوں کے تشدد کر کے قتل کر دیا۔

ٹیکنکل کالج کا طالب علم محمد آصف نجی اسپتال میں نوکری کرتا تھا، ڈاکٹر فرحان نے اس پر چوری کا الزام لگا کر لاٹھیوں سے تشدد کیا، دوران تشدد ملزمان لڑکے کی وڈیو بناتے رہے، زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے محمد آصف جاں بحق ہو گیا۔والدین کا کہنا ہے کہ بیٹا محنت مزدوری کرتا تھا، چور نہیں ہو سکتا۔ پولیس نے والد کی مدعیت میں تھانہ سٹی اے میں مقدمہ درج کر کے ملزمان کو گرفتار کر لیا گیا۔ ورثاء کا الزام ہے کہ پولیس مقدمہ کی تفتیش میں حیل و حجت سے کام لے رہی ہے۔ ورثا کا الزام ہے کہ پولیس والے ملزمان کے ساتھ ملے ہوئے ہیں، حکام بالا ہمیں انصاف دلائیں۔ 


پاک ایشیاء ایک غیر منافع بخش ادارہ ہے۔ ہماری صحافت کو سرکاری اور کارپوریٹ دباؤ سے آزاد رکھنے کے لیے مالی تعاون کیجیے نیز اس خبر کے حوالے سے اپنی آراء کا اظہار کمنٹس میں کریں اور شیئر کر کے ہماری حوصلہ افزائی کریں

WordPress Video Lightbox Plugin