fbpx
بدعنوانی پاکستان سیاست قانون و انصاف نمایاں

نیب کا شکنجہ نرم، صدر مملکت نے نئے آرڈیننس کی منظوری دے دی

اسلام آباد: صدر مملکت عارف علوی نے سرکاری ملازمین کے خلاف کارروائی سے متعلق نیب ترمیمی آرڈیننس 2019 کی منظوری دے دی ہے۔

نیب ترمیمی آرڈنینس کے مطابق سرکاری ملازم کے اثاثوں میں بیجا اضافے پر اختیارات کے ناجائز استعمال کی کارروائی ہو سکے گی۔ ایسے ملازمین کیخلاف کارروائی ہوگی جن کا نقائص سے فائدہ اٹھانے کے شواہد ہونگے۔

نئے ترمیمی آرڈیننس کے مطابق محکمانہ نقائص پر سرکاری ملازمین کے خلاف نیب کارروائی نہیں کرے گا۔ تین ماہ میں نیب تحقیقات مکمل نہ ہوں تو گرفتار سرکاری ملازم ضمانت کا حقدار ہوگا۔

ترمیمی آرڈیننس کے تحت ٹیکس، اسٹاک ایکسچینج، آئی پی اوز کےمعاملات  پر ایف بی آر کارروائی کرسکے گا۔ نیب 50 کروڑ سے زائد کی کرپشن اور اسکینڈل پر کارروائی کرسکے گا۔

ترمیمی آرڈیننس کے تحت سرکاری ملازم کی جائیداد کو عدالتی حکم نامے کے بغیر منجمد نہیں کیا جا سکے گا۔


اس خبر کے حوالے سے اپنی آراء کا اظہار کمنٹس میں کریں


لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی“ کے آپشن یا یہاں کلک کریں

About the author

ویب ڈیسک

ہمارا ویب ڈیسک پاکستان اور ایشیاء سمیت دُنیا بھر میں رُونما ہونے والے حالات و واقعات پر گہری نظر رکھتا ہے اور آپ کو باخبر رکھنے کے لیے خبروں کا انتخاب کر کے انہیں موزوں پیرائے اور اسلوب میں ڈھال کر آپ کے پیشِ نظر کرتا ہے۔

Add Comment

Click here to post a comment

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.