fbpx
پاکستان سیاست

ایک سال میں عمران خان نے ترقی کی شرح آدھی اورمنصوبوں کوروک کر20لاکھ سے زائدافرادکو بے روزگار کر دیا، ترجمان مسلم لیگ (ن)

 مریم اورنگ زیب نے چین میں وزیراعظم عمران خان کی تقریر پر رد عمل دیتے ہوئے کہا ہے کہ عمران خان نے صرف ایک سال میں 6 لاکھ سے زائد لوگوں کو غربت میں دھکیل دیا ہے اور 500 افراد کو جیل بھیجنے کا ہدف بھی مکمل کرچکے ہیں۔

‎مریم اورنگ زیب نے وزیراعظم عمران خان کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ ‘عمران صاحب! صرف ایک سال میں آپ نے ملکی ترقی کی شرح آدھی، کاروبار، صنعت اور روزگار بند کردیا، 6 لاکھ سے زائد لوگوں کو غربت میں دھکیل دیا ہے’۔

ان کا کہنا تھا کہ ‘‎عمران خان نے صرف ایک سال میں ملکی ترقی کی شرح آدھی کردی اور تمام منصوبوں کو روک کر 20 لاکھ سے زائد لوگوں کو بے روزگار کر دیا’۔

ترجمان مسلم لیگ (ن) کا کہنا تھا کہ ‎’عمران صاحب! آج آپ نے جتنے منصوبوں کو عینک لگا کر پڑھا وہ نواز شریف کے لگائے اور مکمل کیے ہوئے ہیں، پاک-چین اقتصادی راہداری (سی پیک) اس خطے، پاکستان کے نوجوانوں اور آنے والی نسلوں کے لیے نوازشریف کا تحفہ ہے’۔

‎انہوں نے کہا کہ ہماری حکومت نے ملکی ترقی کی شرح 5 اعشاریہ8 فیصد تک پہنچادی تھی، 11 ہزار میگا واٹ بجلی، 12 ہزار کلومیٹر سڑکیں اور موٹرویز تعمیر کر کے عوام کو غربت سے نکال رہے تھے لیکن وزیراعظم عمران خان کے حواس پر واشنگٹن ارینا ہو یا چین ہرجگہ اپوزیشن سوار ہے۔

کرپٹ افراد کو جیل بھیجنے کے بیان پر ان کا کہنا تھا کہ ‎’عمران خان امریکا، چین، سعودی عرب، ترکی یا برطانیہ جائیں تو ایک ہی بیانیہ ہے سب کو جیلوں میں ڈال دو لیکن فکر نہ کریں پچھلے ایک سال میں آپ 500 افراد کو جیل بھجوا کر یہ ہدف مکمل کر چکے ہیں’۔

‎مریم اورنگ زیب نے کہا کہ وزیراعظم عمران دوسرے ملک میں بیٹھ کر اپنی قوم کو چور کہتے ہیں، ایسے میں کون سا ملک یہاں منصوبے شروع کرے گا یا پھر اعتبار کرے گا جبکہ ایک سال میں ملک میں سب کو چور اور ڈاکو بنا کر ملکی صنعت، ترقی اور کاروبار کو تباہ کر دیا ہے۔

‎وزیرعظم کے بیان پر تنقید کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ چین نے ترقی اور صنعت کے ذریعے ملک اور عوام کو غربت سے نکالا، یہ وہی چین کے صدر ہیں جن کے دورے کو روکنے کے لیے آپ دھرنا دیے بیٹھے رہے، آج سی پیک کی تعریفیں کرتے ہوئے دھرنے کی تقریریں کیوں بھول گئے۔

انہوں نے کہا کہ ‎بیرون ملک کرپشن کی بات کریں تو پشاور میٹرو کے ایک کھرب کا بھی ذکر کیا کریں۔

واضح رہے کہ وزیراعظم عمران خان نے دورہ چین میں بیجنگ میں عالمی تجارت کے فروغ کے لیے قائم چائنا کونسل میں پاکستان اور چین کے درمیان تجارت اور سرمایہ کاری کے مواقع پر منعقدہ کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا تھا کہ کاش وہ چینی صدر شی جن پنگ کی مثال پر عمل کرسکتے اور پاکستان میں 500 کرپٹ افراد کو جیل میں ڈال دیتے۔

عمران خان کا کہنا تھا کہ چین نے ایک وقت میں پاکستان سے سیکھا تھا لیکن اب وقت ہے کہ پاکستان، چین سے سیکھے، ذاتی طور پر مجھے جس چیز نے چین سے متاثر کیا وہ 30 سال میں 70 کروڑ لوگوں کو غربت سے نکالنا تھا، یہ انسانی تاریخ میں کبھی نہیں ہوا۔


About the author

عدیل رحمان (معاون مُدیر)

عدیل رحمان پاک ایشیاء میں بطور معاون مُدیر کے طور پر اپنی خدمات ادا کر رہے ہیں- یہ پاک ایشیاء کے ابتدائی ساتھیوں میں سے ایک ہیں اور انتہائی جانفشانی سے کام کرتے ہیں اللہ تعالیٰ نے انہیں منفرد تخلیقی صلاحیتوں سے نوازا ہے جس کا اظہار اکثر اُن کی خبروں کی سُرخیوں سے بھی لگایا جا سکتا ہے۔

Add Comment

Click here to post a comment

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.




From Google