fbpx
پاکستان عدالت

ضمانت منظور، کیپٹن صفدر گرفتاری سے بچ گئے

لاہور سیشن کورٹ  نے  کپیٹن (ر) محمد صفدر کی عبوری ضمانت منظور کرتے ہوئے پولیس کو ان کی گرفتاری سے روک دیا۔

پولیس نے 22 اگست کو مریم نواز کی احتساب عدالت میں پیشی کے دوران اہلکاروں کو دھمکیاں دینے کے الزام میں کیپٹن  صفدر سمیت پاکستان مسلم لیگ (ن) کے 14 اراکین کے خلاف مقدمہ درج کیا تھا۔

ایف آئی آر کے مطابق  مریم نواز اور حمزہ شہباز کی احتساب عدالت میں پیشی کے موقع پر کیپٹن (ر) محمد صفدر اور دیگر 14 کارکنان نے پولیس اہلکاروں کے کام میں مداخلت کی اور انہیں دھمکیاں دیں۔

مقدمے میں کہا گیا تھا کہ محمد صفدر نے ایک پولیس اہلکار سے لاٹھی بھی چھین کر ان پر حملہ کرنے کی کوشش کی۔

پولیس نے کیپٹن (ر) صفدر اور دیگر لیگی کارکنا کے خلاف تعزیرات پاکستان کی دفعات 186، 147، 149 اور 353 کے تحت مقدمہ درج کیا تھا۔

کیپٹن(ر) صفدر نے سیشن عدالت میں ضمانت کی درخواست دائر کی اور موقف اپنایا کہ پولیس حکام نے حقائق کے برعکس مقدمہ درج کیا ہے۔

انہوں نے عدالت سے استدعا کرتے ہوئے کہا کہ مقدمہ سیاسی بنیادوں پر درج کیا گیا ہے کہ اس لیے عدالت عبوری ضمانت کے لیے درخواست کی منظوری کا حکم جاری کرے۔

سیشن عدالت کے جج تجمل شہزاد چوہدری نے 50 ہزار روپے کے مچلکوں کے عوض درخواست ضمانت منظور کی۔

عدالت نے نے تھانہ اسلام پورہ پولیس سے کپٹین (ر) محمد صفدر سے متعلق مقدمے کی رپورٹ طلب کیا اور مقدمے کی سماعت 7 ستمبر تک ملتوی کردی۔

مسلم لیگ (ن) لاہور کے صدر پرویز ملک نے کیپٹن (ر) صفدر سمیت مسلم لیگی کارکنان کے خلاف مقدمے کے اندراج پر پنجاب حکومت کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا تھا کہ ‘کشمیر فروخت کرنے والے’ حکمران اپنی ناانصافیوں کے خلاف عوام کی آواز کو دبا نہیں سکتے۔

ان کا کہنا تھا کہ مریم نواز اور حمزہ شہباز کی عدالت میں پیشی کے موقع پر پولیس نے ہمارے کارکنان پر تشدد کیا۔

پرویز ملک کا کہنا تھا کہ عمران خان کی ‘فسطائی’ حکومت لیگی کارکنان کو اپنے رہنماؤں سے اظہار یکجہتی کرنے سے نہیں روک سکتی۔

رکن اسمبلی پرویز ملک کا کہنا تھا کہ ملک میں اس وقت آمریت ہے کیونکہ اپوزیشن کی آواز دبائی جارہی ہے اور میڈیا سینسرشپ کی زد میں ہے۔


About the author

عدیل رحمان (معاون مُدیر)

عدیل رحمان پاک ایشیاء میں بطور معاون مُدیر کے طور پر اپنی خدمات ادا کر رہے ہیں- یہ پاک ایشیاء کے ابتدائی ساتھیوں میں سے ایک ہیں اور انتہائی جانفشانی سے کام کرتے ہیں اللہ تعالیٰ نے انہیں منفرد تخلیقی صلاحیتوں سے نوازا ہے جس کا اظہار اکثر اُن کی خبروں کی سُرخیوں سے بھی لگایا جا سکتا ہے۔

Add Comment

Click here to post a comment

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.




From Google